حضرت راجا بخش ولی اللہ کی بیٹھک کے انہدام کے خلاف ضلع وقف چیرمین نے اسسٹنٹ کمشنر سے کی ملاقات

اے سی نے معاوضہ و تعمیراتی کام کیلئے متبادل وسائل فراہم کرنے کا دیا یقین

شیموگہ:۔ضلع کے شکاری پور تعلقہ میں پچھلے دنوں حضرت راجا بخش ولی اللہ کی بیٹھک کے انہدام کے خلاف برہمی کااظہار کرتے ہوئے ضلع وقف مشاورتی کمیٹی کے چیرمین حبیب اللہ نے اسسٹنٹ کمشنر اور تحصیلدار سے گفتگوکی اور اس کے بعد مثبت نتیجے سامنے آئے۔وقف مشاورتی کمیٹی کے چیرمین حبیب اللہ نے بتایا کہ جیسے ہی درگاہ کے انہدام کے سلسلے میں روزنامہ میں خبر پڑھی گئی اس کے فوری بعد درگاہ کے دستاویزات کے تعلق سے چھان بین کی،لیکن اس زمین کے دستاویزات وقف بورڈ کے ماتحت نہیں ہیں،باوجود اس کے ہم نے شکاری پور پہنچ کر وہاں کی جامع مسجد کمیٹی اور درگاہ کی نگران کمیٹی سے بات کی۔اس دوران معلوم ہو اکہ یہ درگاہ نہیں بلکہ ولی اللہ کی بیٹھک ہے اور سینکڑوںسالوں سے یہ بیٹھک عقیدت کا مرکز بنی ہوئی ہے اور ہر سال یہاں عرس منایا جاتا ہے۔تفصیلات جمع کرنے کے بعد ہم نے تحصیلدار سے بات کی کہ بغیر وقف بورڈ کو مطلع کئے اس طرح کی کارروائی کرنا کہاں تک صحیح ہے اور مقامی لوگوں کو اعتماد میںلئے بغیر اس طرح کا قدم اٹھانا ناقابل قبول ہے۔اس پر تحصیلدار نے اسسٹنٹ کمشنر کے پاس اس معاملے کی تفصیلات موجود رہنے کی بات کی تو فوری طور پر ساگر ڈیویژن کے اے سی سے بات کی گئی۔اے سی نے تمام تفصیلات سننے کے بعد کہا کہ یہ درگاہ نہ ہوتے ہوئے بیٹھک ہونے کی وجہ سے ہم اسی زمین سے متصل سرکاری زمین کو بیٹھک اور جامع مسجد کمیٹی کو سونپے گے،اس کے علاوہ نیشنل ہائی وے اتھاریٹی کے ذریعے سے28 لاکھ روپئے کی مالی امداد بھی جاری کروائی جائیگی ۔ اس پروقف چیرمین حبیب اللہ نے این ایچ اور اسسٹنٹ کمشنر کو مکتوب روانہ کرتے ہوئے مطالبہ کیا کہ حضرت راجا بخش ولی اللہ کی بیٹھک کیلئے کم ازکم 1 ایکر زمین منظور کی جائے اور28 لاکھ کے بجائے50 لاکھ مالی امداددی جائے تاکہ عقیدتمند متبادل مقام پر اس بیٹھک کی تعمیر کرسکیں۔

About Abdul Rehman

x

Check Also

بلدیاتی اداروں کے انتخابات دومراحل میں فی الحال شیموگہ کارپوریشن انتخابات کی تاریخ کا اعلان نہیں

شیموگہ:۔کرناٹک ریاستی الیکشن کمیشن (کے ایس ای سی )نے مقامی بلدیاتی اداروں کے انتخابات دومراحل ...